romantic poetry in urdu- romantic couple dp

0
478

مسکرانا کون سا مشکل کام ہے

بس تمہیں سوچنا ہی تو پڑتا ہے

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

دھڑکنیں گننی  ہیں اک بار تمہارے دل کی

کیا مجھے سینے سے تم اپنے لگا سکتے ہو

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

سنو میرے وجود کے بائیں پہلو میں

دل نہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔تم دھڑکتے ہو

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

بس محبت ہم کو آپ سے ہونی تھی ۔۔۔سو ہو گئی

اب نصیحت چھوڑئیے ساتھ دیجئے اور دعا کیجئے

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

سجنا سنورنا جچتا ہے مجھ پہ

تیری محبت اوڑھ لی جب سے

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

تجھے سوچوں تو پہلو سے سرک جاتا ہے دل یرا

میں دل پر ہاتھ رکھ کر ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ دھڑکنیں ترتیب دیتی ہوں

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

اس نے دیکھا ہے آج پلکیں اٹھا کر

ہائے کہاں جاؤں اتنی محبت لیکر

romantic poetry in urdu- romantic couple dp
romantic poetry in urdu- romantic couple dp

💕💕💕💕💕💕

سنو مجھے اور کچھ نہیں لینا زمانے کے خزانوں سے💕

بس اتنی سی خواہش ہے ____ تم میرے ہی رھو💕

🦋🦋🦋🦋🦋

تیری گفتار میں تو پیار کے تیور بہت کم تھے
جب جھانکا تری آنکھوں میں تو ہم ہی ہم تھے

🦋🦋🦋🦋🦋

اول تو زمانے میں نہیں تم سا کوئی اور
گر ہو بھی تو ہم کون سا تسلیم کریں گے

🦋🦋🦋🦋🦋

اُسے آتا ہے لمحوں میں بھی اپنے عکس کو بھرنا..!!!

نہ ہونا پاس لیکن پھر بھی میرے چار سُو ہونا..!!!

🦋🦋🦋🦋🦋

عشق دیوانہ ھے عشق پاگل ھے
عشق ویرانہ ھے عشق انجانا ھے
مجھے قبول یہ بھی نہیں کے تجھے آئنہ دیکھے
بس تجھے ایک میں دیکھوں اور خدا پوچھے۔۔
یاد میں اسکی رات بھی سویرا لگتا ھے
آنکھ بند ھو یا کھلی بس وہ میرا لگتا ھے
🦋🦋🦋🦋🦋

کوئی نہیں ہے جو تیری کمی کو پورا کر سکے💖

کوئی نہیں جس کو میں چاہ سکوں تیری طرح💖

کوئی اپکو چھوڑنے کا سوچے تو اس کو اجازت دینا محبت ہے لیکن اس کے دل سے سارے پچھتاوے

دور کرنا اس کے دل سے خود کو نکالنا خود کو اس حد تک گرانا وہ اپکو نفرت کے قابل بھی نا سمجھے
اسکو بے پنا محبت کہتے!

🦋🦋🦋🦋🦋

لوٹ آجاؤ ۔

دسمبر چل پڑا گهر سے
سنا ہے پہنچنے کو ہے !
مگر اس بار کچھ یوں ہے
کہ میں ملنا نہیں چاہتی

ستمگر سے ….!
میرا مطلب، دسمبر سے !

کبهی آزردہ کرتا تها !
مجهے جاتا دسمبر بهی
مگر اب کے برس ہمدم
بہت ہی خوف آتا ہے
مجهے آتے دسمبر سے

ستمگر سے …..

دسمبر جو کبهی مجهکو
بہت محبوب لگتا تها
وہی سفاک لگتا ہے !
بہت بیباک لگتا ہے !

ہاں اس سنگدل مہینے سے
مجهے اب کے نہیں ملنا
قسم اسکی… نہیں ملنا !

مگر سنتی ہوں یہ بهی میں
کہ اس ظالم مہینے کو
کوئی بهی روک نہ پایا
نہ آنے سے، نہ جانے سے
صدائیں یہ نہیں سنتا
وفائیں یہ نہیں کرتا !

یہ کرتا ہے فقط اتنا !
سزائیں سونپ جاتا ہے!

🦋🦋🦋🦋🦋

ﺗُﺠﮫ ﺳﮯ ﮐﻮﺋﯽ ﮔِﻠﮧ ﻧﮩﯿﮟ ﻟﯿﮑﻦ…
ﺍﯾﮏ ﺍُﻟﺠﮭﻦ ﻧﮩﯿﮟ ﺳُﻠﺠﮭﺘﯽ ﮨﮯ…!

ﻭﻗﺖ ﮨﮯ ﺗﻮ __ ﺫﺭﺍ ﺳﯽ ﺩﯾﺮ ﭨﮭﮩﺮ…
ﺁﺋِﯿﻨﮯ ﺳﮯ ﺫﺭﺍ ﺳﯽ ﮔﺮﺩ ﮨﭩﺎ…!

ﭘﻮﭼﮭﻨﺎ ﮨﮯ ﮐﮧ ﺧﻮﺍﺏ ﭨﻮﭨﯿﮟ ﺗﻮ…
ﮐﺮﭼﯿﻮﮞ ﮐﻮ ﮐﮩﺎﮞ ﺳﻨﺒﮭﺎﻟﺘﮯ ﮨﯿﮟ..!

” ﺩﻝ ﮐﻮ ﭘﺘﮭﺮ ﮐﮯ ﺳﺨﺖ ﭘﯿﮑﺮ ﻣﯿﮟ…
ﮐﯿﺴﮯ ﯾﮏ ﺩﻡ ﺳﮯ ﮈﮬﺎﻟﺘﮯ ﮨﯿﮟ ﺑﺘﺎ….!

ﻋﻤﺮ ﺑﮭﺮ ﮐﮯ ﻣُﻌﺎﮨﺪﮮ ﮐﺮ ﮐﮯ…
ﺩﻭ ﻗﺪﻡ ﭘﮧ ﮨﯽ ﭼﮭﻮﮌ ﺟﺎﺋﮯ ﺍﮔﺮ…!

ﮈﮔﻤﮕﺎﺗﮯ ______ﻗﺪﻡ ﺍُﭨﮭﺎﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ…
ﺧﻮﺩ ﮐﻮ ﮐﯿﺴﮯ ﺳﻨﺒﮭﺎﻟﺘﮯ ﮨﯿﮟ________ﺑﺘﺎ…!

ﺯﻧﺪﮔﯽ ﺳﮯ ﻧﮑﻠﻨﮯ ﻭﺍﻟﻮﮞ ﮐﻮ…
” ﺩﻝ ﺳﮯ ..” ﮐﯿﺴﮯ ﻧﮑﺎﻟﺘﮯ ﮨﯿﮟ_______ﺑﺘﺎ…!!!

🦋🦋🦋🦋🦋

آج کی دوستی سے پیار سے ڈر لگتا ہے
بھائی کو بھائی کی للکار سے ڈر لگتا ہے

ڈر نہیں لگتا مجھے دشمنوں کے حملے سے
اے مرے دوست ترے وار سے ڈر لگتا ہے

نوز بللہ کہیں یزداں نا بنا بیٹحے توں
اے مصور ترے شہکار سے ڈر لگتا ہے

اتنے چہروں نے مری ذات کو لوٹا ہے کہ اب
ہر نئے چہرے سے فنکار سے ڈر لگتا ہے

اس کے ہر صفحے پے دیشت کی خبر چسپا ہے
اش لئے اب مجھے اخبار سے ڈر لگتا ہے

حسین شمسی بسمل

🦋🦋🦋🦋🦋

تخیل نڈھال ہے
منتشر سوچ ہے

تخیل نڈھال ہے
منتشر سوچ ہے
آزردہ ذہن میں
کلبلاتی سوچوں
کو شفاگزیدہ ہوا
کی خواہش ہے
بوسیدہ خیالوں
کہن سالہ رواجوں سے
نکل کر کچھ دن
کسی نوخیز, معصوم
فضا میں مہکیں
اپنی مٹی سے
تلخ باتوں کی
کنکریاں چن کر
زرد منظر پہ
ہری آس کا روغن کرلیں
گلابی لفظوں کے
نرم دھاگے سے
ادھڑے لہجوں کی
مرمت کرلیں ۔۔۔۔۔
💝💝💝

🦋🦋🦋🦋

عورت اگر پرندے کی صورت میں خلق ہوتی،
تو ضرور “مور” ہوتی۔
اگر چوپائے کی صورت
میں خلق کی جاتی،
تو ضرور “ہرن” ہوتی۔
اگر کیڑے مکوڑے کی صورت میں خلق کی جاتی،
تو ضرور “تتلی” ہوتی۔
لیکن وہ انسان خلق ہوئی تاکہ ماں، بہن, بیٹی اور(بيوى) بنے.
اس حد تک نازک مزاج کہ اک پھول اسے راضی اور خوش کر دیتا ہے، اور اک لفظ اسے مار دیتا ہے.
تعجب یہ ہے کہ عورت اپنے بچپنے میں اپنے باپ کے لیئے برکت کے دروازے کھولتی ہے، اپنی جوانی میں اپنے شوہر کا ایمان کامل کرتی ہے اور جب ماں بنتی ہے تو جنت قدموں تلے رکھ دی جاتی

🦋🦋🦋🦋🦋

جو انسان آپ کے ٹیکسٹ اور کالز کا جواب نہ دے تو سمجھ لیجیئے وہ کسی اور رہ کا مسافر ہو چکا ہے، آپ اپنا قیمتی وقت برباد مت کیجیئے، اُس پہ اپنی توانائی، عزتِّ نفس،پیسہ خرچ مت کیجیئے، کسی دوسری منزل کے مسافر کو اپنے زورِ بازو یا اپنے جذبات کے واسطے دے کے مت واپس بولیں، اُ س کو جانے دیجیئے۔

نوشی گیلانی نے اپنی کتاب ” محبتیں جب شمار کرنا“ میں ایک شعر لکھا تھا۔

روکے سے کہاں روکتا ہے وہ بد عہد
پاؤں چھونے سے بہتر ہے تو اُسے جانے دے

تو آپ بھی ایسا ہی کیجیئے، اللہ نے آپ کا نصیب کسی اچھی جگہ لکھا ہے، اور جو ربّ لکھ دیتا ہے تو وہ ضرور ملتا ہے، بس اچھی اُمید رکھے اپنے پیاروں ، عزیزوں، دوستوں کو وقت دیجیئے اُن کی سنیئے ، کچھ اپنے دل کا حال اُن کو سنائیے، اپنے ضروری کاموں پہ دھیان دیجیئے لوگ تو زندگی میں آتے جات رہتے ہیں، اُن کی وجہ سے اپنی زندگی کو اُس کی لائن سے مت اُتاریئے، وقت نکال کے ذرا قدرت کے نظاروں دیکھے آپ کا رویّہ مثبت ہو جائے گا، قدرت بنیادی طور پہ انسان کی دوست ہے مگر ہم اس بات کو سمجھ ہی نہیں پاتے ہیں، ایک انسان کے آپ کی زندگی میں نہ ہونے سے کوئی اتنا فرق نہیں پڑھتا، ہاں تب بہت فرق پڑتا ہے جب آپ اُس کو اپنے سر پہ سوار کر لیتے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here